Wednesday, 22 April 2015

PM visit to Gilgit Baltistan



گلگت بلتستان کے غیّور عوام کسی بھی سیاسی چال بازی سے ہوشیار رہیں..! ہم ماضی میں بھی غلطیوں سے بہت  نقصان اٹھا چکے ہیں . کوئی بھی اعلان ہو تو عملدرآمد تک اسے اعلان ہی تصور کیا جائے . شگر اور کھرمنگ کو ڈسٹرکٹ بنانے کا اعلان تو ہوا لیکن نتیجہ کچھ بھی نہیں نکلا . گلگت اور سکردو کو بگ سٹیز کا درجہ دینے کا اعلان ہوا لیکن نتیجہ ہمارے سامنے ہیں .. جی بی میں یونیورسٹیاں بنانے کا بھی وعدہ کیا گیا بعد میں پتہ  چلا کہ یہ سب صرف دوکہ بازیاں تھیں . گلگت بلتستان اور فاٹا کے درمیان کوٹا سسٹم کو بھی علیحدہ کرنا وقت کی ضرورت ہے ..



بشکریہ  شجاعت علی کمال**

This post have 0 comments

Next article Next Post
Previous article Previous Post

Advertisement